ایل او سی کشمیریوں کے سینوں پر کھینچی گئی منحوس لکیر : مسزتنویرلطیف

کشمیر میرے جیسے منقسم کشمیریوں کا وطن ہے 

ہمیں اپنی نئی نسل کو ایک خوشحال اور پرامن مستقبل دینے کے لیے نفرتوں کی دیوارں کو گرانا ہوگااور تمام مسائل کا حل مل بیٹھ کر ڈائلاگ کے ذریعے نکالنا ہوگا۔انہوں نے مزیدکہاکہ کشمیریوں نے بہت قربانی دی ہے اور اب انصاف اور امن کا وقت ہے تاکہ منقسم خطے کے عوام سکھ کاسانس لے کر اپنی زندگی بسرکرسکیں۔
خطے میں قیام امن اور ٰنسانی ترقی کے لیے اپنی تنظیم کی کوششوں کا ذکرکرتے ہوئے انھوں نے کہاکہ ہم ا ٰنسانیت سے محبت کے مشن پر چلتے ہوئے اپنی سرگرمیوں کو جاری وساری رکھیں گے۔
مٹانے سے ہی منقسم خاندانوں کے دکھ کم ہوسکتے ہیں۔پریس فارپیس کی سربراہ کی میڈیا سے 
گفتگو

بھارت کے زیراہتمام کشمیر کے دورے پر آئی ہوئی پریس فار پیس کی چیف پٹرن مسز تنویرلطیف نے کہا ہے کہ لائن آف کنٹرول منقسم کشمیریوں کے سینے پر کھنچی گئی ایک منحوس لکیر ہے جس کو مٹا کر ہی کشمیریوں کے دکھ کم ہو سکتے ہیں۔
انٹرا کشمیر کانفرنس کے بعد مقامی پریس کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے مسز تنویرلطیف نے کہاکہ کشمیر میرے جیسے منقسم کشمیریوں کا وطن ہے لیکن آج میں یہاں اجنبی ہوں اس لیے کہ ہجرت کے باعث ہمیں اپنا وطن چھوڑنا پڑا اور اپنی ساری زندگی اپنے پیاروں سے دور رہ کر بسرکرنا پڑی۔ امن کے لیے کام کرنے والی تنظیم پریس فار پیس کی سرپرست بیگم تنویرلطیف کا کہنا تھا کہ ہجرتوں کے دکھوں کے خاتمے اور امن کے قیام کے لیے دونوں اطراف کی ماوٗں اور خواتین کو سامنے آ کراپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔
Comments