گوشۂ جمیل


 یہ صفحہ  معروف کشمیری   قلم کار ، معلم اور مصنف جناب جمیل احمد کی تحریروں کے لیے مختص ہے۔ وہ ایک ہر دلعزیز استاد، بہترین دوست اور شفیق انسان ہیں۔ درس وتدریس کے  علاوہ  زرعی شعبے میں ترقی ،  نوجوان نسل کی تعلیم و  تربیت اور سیر و سیاحت  سے  خصوصی دلچسپ رکھتے  ہیں۔  پیشہ ورانہ امور کی انجام دہی کے لیے متعدد سرکاری اور غیر سرکاری اداروں سے منسلک رہے ہیں۔ زرعی یونیورسٹی راولاکوٹ کے ابتدائ گریجوایٹس میں شمار ہوتے ہیں۔اس کے علاوہ یونیورسٹی آف مینیجمنٹ اینڈ ٹیکنالوجی لاہورسے تعلیم حاصل کر رکھی ہے۔ ، 





تو اپنی سر نوشت اب اپنے قلم سے لکھ

خالی رکھی ہے خامہ حق نے تری جبیں




میں اپنے محدود تجربے اور مشاہدے کی بنیاد پر یہ سمجھا ہوں کہ جس دن سے ہم اپنی کمٹمنٹ پوری کرنے لگیں گے، اس دن سے ہماری زندگی میں نظم و ضبط اور ترتیب آنا شروع ہو جائے گی۔ اس دن سے ہمارا سسٹم بھی ٹھیک ہونا شروع ہو جائے گا، اور اسی دن سے ہم اپنی زندگیوں میں خوش گوار تبدیلیوں کا آغاز ہوتا ہوا دیکھیں گے۔ آپ یوں سمجھیے کہ کمٹمنٹ ایک ارادہ ہے، ایک عہد ہے جو ہم اپنے آپ سے کرتے ہیں۔ کمٹمنٹ ایک چھوٹے سے چھوٹا اور بڑے سے بڑا وعدہ ہے جو ہم اپنے دوست، رشتے دار، کولیگ یا ووٹر سے کرتے ہیں۔ کمٹمنٹ ایک ایمپلائمنٹ ایگریمنٹ ہے جو جاب شروع کرتے وقت ہم کمپنی یا دفتر سے کرتے ہیں