خصوصی نمائندہ برائے پاکستان جین میوریس سے پریس فار پیس کے ڈاریکٹر راجہ وسیم کی ملاقات

اسلام آباد //اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل بان کی مون کے خصوصی نمائندہ برائے پاکستان جین میوریس اور اقوام متحدہ کے ترقیاتی پروگرام برائے خواتین کی ڈاریکٹر ایلس شیکلفورڈ سے پاکستانی زیر انتظام کشمیر کے پریس فار پیس کے ڈاریکٹر راجہ وسیم کی ملاقات ہوئی ۔تفصیلات کے مطابق پریس فار پیس کے ڈاریکٹر راجہ وسیم نے گزشتہ روز اسلام آباد میں اقوام متحدہ کی سیکورٹی کونسل کی قرارداد 1325 کے حوالے سے یو این کی جانب سے منعقدہ ڈائیلاگ میں پاکستانی زیرانتظام کشمیر کی نمائندگی کی ۔اس موقع پر انہوںنے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل بان کی مون کے خصوصی نمائندے برائے پاکستان جین میوریس سے بھی الگ ملاقات کی ۔اس موقع پر راجہ وسیم نے کہا کہ کنٹرول لائن پر پچھلے بیس آرپار گولہ باری سے بنیادی ڈھانچہ تباہ ہوچکاہے ۔وہاں رہنے والے افراد نے بیس سال انتہائی کسمپرسیکی زندگی گزاررہے ہیں اب ضرورت اس بات کی ہے کہ کنڑول لائن کے اوپر آباد آبادی کی ترقی کے لیے بھی فنڈز مختص کریں ۔امن مذاکراتی عمل میں کشمیریوں کو شریک کیا جائے ۔اقوام متحدہ کی قراردادوں پر من و عن عمل کیا جائے اور فریق ممالک کو اس بات کا پابند بنایا جائے کہ وہ اقوام متحدہ بالخصوص سیکورٹی کونسل کی قراردادوں پر عمل درآمد کو یقینی بنائیں ۔قراردادوں پر عمل درآمد نہ ہونے کی وجہ سے کشمیری عوام میں سخت بے چینی پائی جاتی ہے ۔اس موقع پر اقوام متحدہ کے خصوصی نمائندے نے یقین دلایا کہ وہ تمام تحفظات ،تجاویز کو سیکرٹری جنرل تک پہنچائیں گے اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل درآمد متعلقہ ممالک کی ذمہ داری ہے ۔ہم حکومتوں کے ساتھ مل کر کام کرنے پر یقین رکھتے ہیں ۔اقوام متحدہ کے ترقیاتی پروگرام برائے خواتین کی کنٹری ڈاریکٹر ایلس نے یقین دلایا کہ کنٹرول لائن پر فائرنگ سے متاثرہ خاندانوں بالخصوص خواتین کے حوالے سے اقوام متحدہ کا ترقیاتی پروگرام اپنا لائحہ عمل جلد طے کرے گا۔


Comments